جانوروں کی سبق آموز کہانیاں

Image
زرافہ سے چاچا زرافہ بننے کی کہانی کچھ یوں شروع ہوئی کہ کچھ سال پہلے یہاں بہت تیز بارشیں ہوئی تھیں اور خطرناک طوفان آیا تھا ، کمزور اور چھوٹے درخت تو گر گئے ،
Image
ماسی چڑیا جو یہ سب دیکھ رہی تھی ، اس نے کَلُّو سے کہا : بیٹا کَلُّو ! جب کوئی پریشان ہو ، مصیبت میں ہو ، اس کی مدد کرنا چاہئے ، چاہے وہ دشمن ہی کیوں نہ ہو۔
Image
ٹِلّو بندر ایک درخت سے دوسرے درخت پر تیزی سے چھلانگ لگاتے ہوئے اپنے آپ سے بول رہا تھا : جلدی۔ ۔ ۔ جلدی کر ٹِلّو جلدی ، رات ہونے سے پہلے تجھے گھر پہنچنا ہے
Image
ایک بار ان کی ہنستی مسکراتی زندگی میں اچانک سے ایک مصیبت آپڑی ، ہُوا کچھ یوں کہ سردی کا موسم تھا ، روزانہ کی طرح بڑے باتیں کررہے تھے اور بچّے کھیل رہے تھے
Image
نہیں!نہیں چنکو بیٹا! صبح ہوئے تو کافی دیر ہوگئی ہے ، ضرور کچھ اور مسئلہ ہوگا ، اسی لئے ہمارے گھر میں اندھیرا ہے ، ورنہ ہمارا گھر سب سے بہترین جگہ پر ہے۔
Image
ہرن بھیّا! ہم راستہ بھول گئے ہیں اور غلطی سے اس کھُلے میدان میں آنکلے ہیں ، یہاں سے نکلنے میں کیا آپ ہماری مدد کرسکتے ہیں؟ بڑے دُنبے نے ملاقات کے بعد ہرن سے کہا۔
Image
واہ بھئی واہ! اچھی اچھی خوشبو والے تازہ تازہ پھل جمع کئے ہوئے ہیں آپ نے ، یہ تو باہر سے ہی اتنے اچھے معلوم ہورہے ہیں اندر سے ان کا ذائقہ کیسا شاندار ہوگا!
Image
ارے یار! صبح صبح کے اتنے اچھے موسم میں تم اداس کیوں ہو؟ کیا ہوا ہے جو پریشان بیٹھے ہو؟ شیفی بندر نے باہر جاتے ہوئے پڑوسی گدھے کو دیکھ کر کہا۔
Image
میرا موٹا دوست ، دُبلا کیوں ہوتا جا رہا ہے ، کوئی پریشانی ہے؟ چھوٹے بندر نے درخت سے اُترتے ہوئے کہا۔